Mahangai ka Jin bekabu

by admin



رپورٹ کارنامہ نیوز بیرو چیف سندھ حاکم علی دل
ملک برادری کے سرپرست اعلیٰ ملک نور محمد صاحب قوم کو آگاہ کر رہے ہیں آج کی مہنگائی کے حوالے سے جس میں یہ بتا رہے ہیں کہ کس طرح بھینس والے کے اوپر ظلم و ستم ڈھایا جارہا ہے راشن بہت مہنگا کیا جارہا ہے دودھ کے ریٹ بڑھانے کی کوئی رسائی نہیں کی جا رہی ہے اور اس کام کو تباہ کیا جا رہا ہے جیسے جیسے وقت گزر رہا ہے اس کام کو تباہی کی طرف گھسیٹا جا رہا ہے ہم آپ سب سے اور گورنمنٹ سے اور اعلی افسران سے تمام کرتا دھرتاؤں سے یہ اپیل کر رہے ہیں کہ خدارا اس کام کو آ کر اس کا چیک اینڈ بیلنس کیا جائے ۔ کہ راشن مہنگا ہو رہا ہے تو دودھ بھی مہنگا کروایا جائے ورنہ راشن کے لئے کوئی اور ایسی کمیٹی بٹھائی جائے جو اس طرح کا ریٹ کھولے کے بھینس والے کو بھی کچھ منافع ہو ہماری انویسٹمنٹ کا یہ عالم ہے کہ ہماری انویسٹمنٹ کروڑوں میں گئی ہوئی ہے ہم لوگوں کے کروڑوں کے مقروض ہو چکے ہیں اور یہ کہ ہمیں اس کام سے کوئی بھی بچت نہیں آرہی ہے اگرچہ اس کے اوپر نظرثانی نہیں کیا گیا تو یہ سمجھ لیں کہ یہ انڈسٹری تباہ و برباد ہوتی نظر آ رہی ہے ہر فارمر کو ایسا نہیں کہ صرف ہمارے ساتھ یہ اکثریت کا مسئلہ ہے اقلیت کا مسئلہ نہیں ہے اس کے اندر ملک نور محمد جو ملک برادری کے سرپرست اعلی ہیں اور پوری بھینس کالونی اور فارمر اور گورنمنٹ سے یہ اپیل کرتے ہیں کہ سر جوڑ کر بیٹھا جائے اور اس معاملے پرنظرثانی کی جائے کہ کس طرح اس کام کو کیا جائے کہ ہماری بھی دال روٹی چلے اور ہم شہر کو بھی دودھ کی سپلائی فراہم کر سکیں

Related Posts

Leave a Comment